Skip to main content

پاکستان سعودی تعلقات: آرمی چیف حالات کو معمول پر لانے کے لیے سرگرم


 پاکستان اور سعودی عرب کےمعاملے سے واقف افراد کے مطابق ، اسلام آباد رواں ہفتے کے آخر میں اپنے آرمی چیف کو سعودی عرب بھیجے گا، تاکہ اس بڑھتے ہوئے خراب سفارتی تعلقات  کو حل کرنے کی کوشش کی جاسکے۔ جس میں ریاض پاکستان سے جلد 3 ارب ڈالر کے قرض کی ادائیگی کا مطالبہ کر رہا ہے۔ دونوں دیرینہ حلیفوں کے مابین تنازعہ وزیر اعظم عمران خان کی حکومت  پرنازک حالات میں قرض کی ادئیگی کے لیے دباؤ ڈالنے سے شروع ہوا ہے۔ جس کی وجہ سے پاکستان کو اپنے دوسرے روایتی حلیف بیجنگ سے مدد لینے پر مجبور ہو گیا ہے۔ ریاض نے پاکستان سے 3 بلین ڈالر کے قرض کے کچھ حصے کی ادائیگی کا مطالبہ کیا ہے اور  3.2 بلین ڈالر کی تیل قرض کی سہولت کو بھی منجمد کردی ہے۔ حکومت کے قریبی لوگوں کے مطابق ، جولائی میں پاکستان کو 2018 میں ریاض کے منظور شدہ 1 بلین ڈالر کی واپسی پر مجبور کیا گیا تھا۔ اب دونوں فریقوں نے قرض کی بقیہ ادائیگی کے سلسلے میں حالات خراب ہیں اور مزاکرات کی اشد ضرورت ہے۔

ایک نجی پاکستانی بینک کے صدر نے بتایا کہ سعودیوں نے مزید ایک ارب ڈالر واپس بھیجنے کے لئے کہا ہے۔ اسلام آباد میں اس معاملے سے واقف افراد کا کہنا تھا کہ حکومت نے آرمی چیف کو سعودی عرب بھیجنے کا عزم کیا ہے ، تاکہ ریاض کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانے کی کوشش کی جاسکے۔

پچھلے سال اگست میں سابقہ ریاست کشمیر کو خود مختاری دینے کے بعد ، نئی دہلی کی ہندو قوم پرست حکومت نے اچانک ہندوستانی زیر انتظام کشمیر کی خصوصی حیثیت کو منسوخ کردی۔ جس پر سعودی عرب نے عمران خان کی طرف سے کارروائی کے مطالبات کو بار بار نظرانداز کیا۔ اس سے عمران خان ، جو کبھی سعودی ولی  محمد بن سلمان کا خصوصی جیٹ استعمال کرتا تھا، اس بات پر مجبور ہو گیا ہے کہ سعودی عرب کے مقابلے میں ترکی اور ملائشیاء کی حمایت حاصل کریں


تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ مسئلہ کشمیر پر سعودی عرب م، اسلامی تعاون تنظیم میں اس مسئلے پر تبصرہ کرنے کی کوششوں کو روکنے کے ساتھ ساتھ اس ریاست کے اہم تجارتی شراکت داروں میں سے ایک ہے۔ جو ہندوستان کو ناراض نہ کرنے کے لیے متحرک تھی۔ جس پر پاکستان کو اعتراض تھا۔ اب معما ملہ یہاں تک آ گیا ہے کہ اسلام آباد کو سعودی قرض، جو اصل میں اس سال کے آخر میں اور 2021 میں قسطوں میں ادا کرنا تھا ، پہلے ادا کرنا پڑا۔  جبکہ ملتوی تیل کی ادائیگی کی سہولت پاکستان کی بیرونی ادائیگی کی پوزیشن کی حمایت کرنا تھی۔ جس کو اب منجمد کر دیا گیا ہے۔

 عارف رفیق نے کہا ، "ایسا لگتا ہے کہ سعودیوں نے کشمیر پر پاکستانیوں کی استقامت کی تعریف نہیں کی۔" چین صرف پاکستان کا بنیادی آپشن نہیں بلکہ کسی حد تک صرف آپشن بن رہا ہے۔ یہ تنازعہ پاکستان کے نازک مالی صورت حال کے لیے خطرہ ہے۔ مرکزی بینک کے پاس غیر ملکی ذخائر میں صرف $ 12.5 بلین کی مالیت ہے جو صرف تین ماہ سے زیادہ کی درآمدات کے لیے کافی ہے۔ ملک کو 6 بلین ڈالر کا آئی ایم ایف پروگرام روکنے پر بھی مجبور کیا گیا ہے، جبکہ کچھ  کورونا وائرس کے وبائی مرض سے ہونے والی معاشی خرابی بھی ہے۔

 


Comments

Popular posts from this blog

China wants to see Pakistan lead Muslim countries

  China wants to see Pakistan lead Muslim countries China says Pakistan is the only Muslim country with a nuclear power that wants to lead the Muslim world, diplomatic sources said. China wants Pakistan to lead the Muslim world. According to the details, China raises its voice in support of Pakistan at every opportunity. Once again, China has raised its voice in support of Pakistan. Diplomatic sources say that China wants Pakistan, the only nuclear power among Muslim countries, to lead Muslim countries. It is currently circulating in the media that China is going to form a new bloc in the region and China's inclination towards Iran is also a link in the same chain. Beijing is close to finalizing a 25-year strategic partnership agreement with Tehran over a 400 billion investment. China has an important opportunity to increase its importance in Muslim countries in order to increase its influence in the region. Pakistan did not even attend the Kuala Lumpur summit under pressure

Pakistan and Saudi Arabia: Kashmir issue or demand for repayment of loans?

 While the Corona epidemic has had a profound effect on the global health system, the virus has also hit the economies of most countries, and now even prosperous countries are worried about their spending. A clear example of this is the oil-dependent Arab countries, especially Saudi Arabia. Relations between Pakistan and Saudi Arabia and the economic situation in Saudi Arabia have been hotly debated on social media these days. The talk started with a statement by the Foreign Minister of Pakistan on Kashmir. Pakistan's Foreign Minister Shah Mehmood Qureshi said in a program on private TV channel ARY, "I am telling this friend today that Pakistan's Muslims and Pakistanis who are ready to die fighting for your integrity and sovereignty Today, they are asking you to play the leadership role that the Muslim Ummah is expecting from you. Shah Mehmood Qureshi said that OIC should not play a policy of blindfold and rescue. He said that a meeting of foreign ministers should be conve

Attack on Saudi Arabia, Pakistan strongly condemns

  Attack on Saudi Arabia, Pakistan strongly condemns Pakistan has strongly condemned missile and drone strikes on Saudi Arabia by Houthi rebels. Pakistan reiterated its full support and solidarity with Saudi Arabia and demanded an immediate end to such attacks. Pakistan appreciated successful deterrence of drone and missile strikes. The Arab League had thwarted another drone and ballistic missile attack by Houthi rebels yesterday. Through dynamite-laden drones attempts were made to target southern Saudi Arabia and the ballistic missile was fired at Jazan. Both attacks were destroyed before reaching the destination. Yesterday, PML-N President Shahbaz Sharif strongly condemned the missile and drone attack on Saudi Arabia, calling it an attack on the entire Ummah. In his statement, Shahbaz Sharif said that the security, geographical integrity and sovereignty of the Holy Hijaz is dearer to every Muslim than his own life. Attacking Saudi Arabia is tantamount to attacking the entire Um